عمران خان کی عدالت پیشی کے دوران پی ٹی آئی کے کارکنان کو حراست میں لے لیا گیا

چیئر مین تحریک انصاف عمران خان کی عدالت پیشی کے موقع پر دفعہ 144 کا نفاذکیا گیا تھا ،دوسری طرف پی ٹی آئی کے کارکنان کو دفعہ 144 کی خلاف ورزی کرنے پر 4کارکنوں کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔
پی ٹی آئی کے زیرِ حراست کارکنانعرے بازی کرتے ہوئے جوڈیشل کمپلیکس اسلام آباد پہنچے تھے۔
اس سے قبل آئی جی اسلام آباد نے کہا تھا کہ سیکیورٹی کا مقصد عمران خان کو روکنا نہیں ہے بلکہ انہیں تحفظ فراہم کرنا ہے۔
سیکیورٹی کے فل پروف انتظامات کیے گئے ہیں، کسی ناخوشگوار واقعے سے نمٹنے کیلئے دفعہ 144 کا نفاذ کیا گیا ہے۔
پنجاب حکومت نے دفعہ 144 نافذ کی ہے اس لیے آج ہر قسم کے سیاسی اجتماعات پر پابندی عائد رہے گئی۔
نوٹیفکیشن کے مطابق ایک دن کیلئے ہر قسم کے سیاسی اجتماعات، ریلیوں اور دھرنوں پر مکمل پابندی عائد ہوگئی۔
توشہ خانہ کیس میں عمران خان پیشی کیلئےزمان پارک لاہور سے اسلام آباد کیلئے روانہ ہوگئے ہیں۔ انکے ہمراہ کارکنان کی بڑی تعداد بھی موجود ہے انکے کارکنان نے ڈنڈے بھی اٹھا رکھے ہیں،پولیس کی بھاری نفری بھی موجود ہے