آپ کو غلطی کا احساس ہوگیا، عدالت سراہتی ہے، چیف جسٹس نے فرد جرم کی کاروائی مئوخر کر دی

خاتون جج کو دھمکی پر عمران خان نے معافی مانگ لی، اس موقع پر عمران خان نے کہا کہ اگر عدالت کہے تو خاتون جج کے پاس جاکر بھی معافی مانگ لوں، میری 26 سال کی کوشش رول آف لا کی ہے۔ میرے سوا جلسوں میں رول آف لا کی کوئی بات نہیں کرتا ۔اسلام آباد ہائی کورٹ نے عمران خان کا معافی کا بیان سن کر فرد جرم عائد کرنے کی کارروائی موخر کرتے ہوئے عمران خان کو بیان حلفی جمع کرنے کی ہدایت کردی۔ چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ ہم appreciate کرتے ہیں۔ جو ہوا نہیں ہونا چاہیے تھا۔ اگر آپ کو غلطی کا احساس ہوگیا تو عدالت اس کو سراہتی ہے۔ اس کے بعد عدالت نے عمران خان پر فرد جرم عائد کرنے کی کارروائی مؤخر کردی۔

جواب دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here

+ 22 = 32