کرپشن کا خاتمہ کئے بغیر نظریہ پاکستان کی تکمیل نہیں ہو سکتی: امانت زیب

لاہور( سٹاف رپورٹر )پاکستان سے کرپشن کا خاتمہ کیے بغیر نظریہ پاکستان کی تکمیل نہیں ہو سکتی ۔سیاستدان ایک دوسرے کی کرپشن اور لوٹ مار کو تحفظ دیتے ہیں۔ان خیالات کا اظہار سابق طالبعلم رہنمائوں پر مشتمل نئی سیاسی جماعت پاکستان فلاح پارٹی کے مرکزی سیکرٹری جنرل امانت زیب نے نیوز الرٹ کے نمائندے سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔امانت زیب نے کہا کہ پاکستان کی پسماندگی کی سب سے بڑی وجہ کرپشن ہے 1977کے بعد پاکستانی سیاست کرپشن کی دلدل میں دھنستی چلی گئی، جنرل ضیا اور جنرل مشرف کی آمرانہ حکومتوں نے بھی کرپشن کے فروغ میں بھرپور کردار ادا کیا جبکہ عوام کے ووٹوں سے منتخب ہونے والی حکومتوں نے بھی عوام کی حالت سدھارنے کی بجائے لوٹ مار ،اور اپنی دولت میں ہر جائز ناجائز طریقے سے اضافہ کرنے کو ترجیح دی انہوں نے کہا کہ بیرون ملک کاروبار کرنا جرم نہیں لیکن پاکستان کی لوٹ مار اور کرپشن ،کمیشن اور ناجائز ذرائع سے اکھٹی کی گئی دولت سے کاروبار کرنا جرم ہے امانت زیب نے کہا کہ وزیراعظم قوم کو یہ بتائیں کہ حسین نواز ،حسن نواز ،اور مریم نواز کے پاس 2000ملین ڈالر کی خطیر رقم آئی کہاں سے انہوں نے کہا کہ انٹر نیشنل آڈٹ فرم سے پانامہ لیکس کا آڈٹ کروایا جائے امانت زیب نے کرپشن میں ملوث فوجی افسران کے خلاف کاروائی کرنے پر آرمی چیف کے کردار کو سراہتے ہو ئے کہا کہ ایسے اقدامات سے کرپشن پر قابو پانے میں مدد ملے گی ۔ انہوں نے پانامہ لیکس کے معاملے پر کسی بھی پارلیمانی کمیٹی کے قیام کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ یہ ایک دوسرے کو تحفظ دینے کی کوشش ہے جسے کسی صورت قبول نہیں کیا جائے گا

جواب دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here

− 5 = 1