کرنسی کنورٹر

اوپن مارکیٹ ریٹس

ہمیں فالو کریں

756,847FansLike
9,838FollowersFollow
533,700FollowersFollow
145,417SubscribersSubscribe

نواز شریف اور چوہدری شجاعت کی 15 برس بعد ملاقات، سیٹ ایڈجسٹمنٹ کی پیشکش

لاہور، ن لیگی رہنما میاں نواز شریف اور ق لیگ کے سربراہ چوہدری شجاعت کی 15 برس بعد 40 منٹ کی ملاقات ہوئی، اس ملاقات میں الیکشن میں الحاق پر بات چیت ہوئی۔

فیصلہ کیا گیا کہ ایک کمیٹی بنائی جائے گی جو مذاکراتی عمل مکمل کرے گا، نواز شریف اور چوہدری شجاعت حسین کے درمیان ملاقات میں سیٹ ایڈجسٹمنٹ اور آئندہ انتخابات سے متعلق مشاورت کی گئی۔

سابق وزیراعظم نواز شریف کیساتھ اس اہم ملاقات میں شہباز شریف، مریم نواز، رانا ثناء اللہ، ایاز صادق اور اعظم نذیر تارڑ موجود تھے جبکہ چوہدری شجاعت حسین کی طرف سے ملاقات میں چوہدری سالک حسین، چوہدری شافع حسین، چوہدری وجاہت اور طارق بشیر چیمہ شریک ہوئے۔

توہین الیکشن کمیشن: عمران خان اور فواد چوہدری کے جیل ٹرائل کا فیصلہ

دونوں جماعتوں کی ایک کمیٹی بنائی جائے گی جو الیکشن میں الحاق پر مذاکرات کرے گی۔

ذرائع کے مطابق چوہدری شجاعت نے کہا ہے کہ جن سیٹوں سے ہمارے لوگ جیتے تھے نہ صرف وہ ہمیں دی جائیں اسکے علاوہ بھی گجرات، سیالکوٹ، منڈی بہاؤالدین اور حافظ آباد میں سیٹیں دی جائیں تاکہ وہ اپنے زیادہ سے زیادہ امیدوار کھڑے کر سکیں۔

ق لیگ کیجانب سے یہ بھی کہا گیا ہے کہ جن سیٹوں سے (ن) لیگ کے لوگ جیتے تھے اسکے نیچے صوبائی اسمبلی کی سیٹیں انہیں دی جائیں ، (ق) لیگ نے بہاولپور سے طارق بشیر چیمہ کی نشست بھی مانگی ہے اور اسکے نیچے دو ممبران صوبائی اسمبلی کی نشستوں پر امیدوار بھی طارق بشیر چیمہ کی مرضی کے ہوں گے۔

عام انتخابات کیلئے ٹکٹ شفافیت اور میریٹ کی بنیاد پر دیئے جائیں گے، نواز شریف

نواز شریف اور چوہدری شجاعت کے درمیان ملاقات کے بعد (ن) لیگ کا وفد میڈیا سے گفتگو کیے بغیر روانہ ہو گیا جبکہ (ق) لیگ کی جانب سے بھی میڈیا سے کسی نے بات نہیں کی۔