اوپن مارکیٹ ریٹس

ہمیں فالو کریں

957,235FansLike
10,005FollowersFollow
575,400FollowersFollow
200,591SubscribersSubscribe

سرکاری ملازمین کی تنخواہوں اور پنشن میں30فیصد اضافے کی منظوری

وزیراعظم شہبازشریف کی زیر صدارت ہونے والے وفاقی کابینہ کے خصوصی بجٹ اجلاس میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 35 فیصد تک ایڈہاک اضافے کی منظوری دیدی۔

وفاقی کابینہ کے اجلاس میں آئندہ مالی سال کے بجٹ کی منظوری دی گئی اور سرکاری ملازمین کی تنخواہوں اور پینشن میں اضافے کا بھی حتمی فیصلہ کیا گیا۔

وزارت خزانہ نے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں اورپنشن میں 20 فیصد ایڈہاک ریلیف کی تجویز پیش کی، وفاقی کابینہ کے اجلاس میں وزارت خزانہ کی تجویز پر بحث کے بعد سرکاری ملازمین کی تنخواہوں اور پنشن میں 35 فیصد تک ایڈہاک اضافے کی منظوری دیدی۔

بجٹ:دفاع کیلئے 1804اورترقیاتی پروگرام کیلئے 1150ارب کی منظوری

گریڈ ایک سے گریڈ 16 کے سرکاری ملازمین کے لیے تنخواہ میں 35فیصد ایڈہاک اضافے کی منظوری دی گئی ہے جبکہ گریڈ 17سے اوپر کے سرکاری ملازمین کی تنخواہ میں 30 فیصد اضافے کی منظوری دی گئی ہے۔

وفاقی کابینہ نے کم سے کم تنخواہ 30ہزار روپے مقرر کرنے کی منظوری دی تاہم وزیراعظم نے مزدور کی تنخواہ میں مزید 2 ہزار کا اضافہ کرتے ہوئے کم سے کم اجرت 32ہزار روپے مقرر کرنے کی منظوری دی جبکہ پینشنرز کی پینشن میں ساڑھے 17فیصد اضافے کی منظوری دی گئی ہے۔