اوپن مارکیٹ ریٹس

ہمیں فالو کریں

991,097FansLike
10,005FollowersFollow
575,900FollowersFollow
207,706SubscribersSubscribe

بجٹ میں تنخواہوں میں 15 سے 20 فیصد اضافے کی تجویز

ابتدائی طور پر وفاقی بجٹ میں تنخواہوں میں 15-20 فیصد اضافے کی تجویز پیش کی گئی تھی۔

وزارت خزانہ کے ذرائع کے مطابق بیوروکریسی کے لیے موناٹائزیشن پالیسی 40 ہزار سے بڑھا کر 60 ہزار اور گریڈ 20 تک کے ملازمین کے لیے 65 ہزار سے بڑھا کر 1 لاکھ پانچ ہزار روپے کرنے کی تجویز ہے۔

گریڈ 21 کے افسران کے لیے موناٹائزیشن پالیسی 75 ہزار روپے سے بڑھا کر ایک لاکھ 20 ہزار روپے کرنے کی تجویز ہے جبکہ گریڈ 22 کے افسران کے لیے موناٹائزیشن 95 ہزار روپے سے بڑھا کر ایک لاکھ 55 ہزار روپے کرنے کی تجویز زیر غور ہے۔

جیو نیوز کے مطابق ذرائع کا کہنا ہے کہ گریڈ 1 سے 22 تک کے ملازمین کی تنخواہوں میں 10 فیصد اضافے سے تقریباً 80 ارب روپے کا اثر پڑے گا۔

ذرائع کے مطابق ایک سے 16 گریڈ کے ملازمین کیلئے میڈیکل اور کنوینس الاؤنس میں 200 فیصد اضافے کا مطالبہ ہے۔

وزارت خزانہ کے ذرائع کے مطابق گریڈ ایک سے گریڈ 16 اسکیل کے ملازمین کو 1800 روپے کنوینس الاؤنس اور 1500 روپے میڈیکل الاؤنس مل رہا ہے جبکہ 17 اور 18 گریڈ کے افسران کو اس وقت 5000 روپے کنوینس الاؤنس مل رہا ہے، 17 سے 18 گریڈ کیلئے بھی کنوینس الاؤنس میں 200 فیصد اضافے کی ابتدائی تجویز ہے۔

ذرائع کے مطابق لیول 1 سے 16 تک کے ملازمین کو 2021 اور 2022 میں بالترتیب 25 اور 15 فیصد کا امتیازی الاؤنس ملا۔ صوبائی اور وفاقی ملازمین کے درمیان تنخواہ کے فرق کو کم کرنے کے لیے عدم مساوات کا فائدہ جاری رکھنے کی بھی تجویز ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ تنخواہوں اور مراعات میں اضافے کی تجاویز ابتدائی مرحلے میں ہیں۔ حتمی فیصلہ وزیراعظم وزارت خزانہ اور وزرا کی کابینہ سے مشاورت کے بعد کریں گے۔

latest urdu news