اوپن مارکیٹ ریٹس

ہمیں فالو کریں

999,192FansLike
10,007FollowersFollow
576,200FollowersFollow
207,706SubscribersSubscribe

پنجاب حکومت نے ہتک عزت قانون اسمبلی میں پیش کردیا

لاہور، پنجاب حکومت نے ہتک عزت قانون 2024ء ایوان میں پیش کردیا۔

وزیر پارلیمانی امور مجتبیٰ شجاع الرحمن نے بل ایوان میں پیش کیا، بل کا اطلاق پرنٹ، الیکٹرونک اور سوشل میڈیا پر ہوگا۔

بل کے تحت پھیلائی جانیوالی جھوٹی اور بے بنیاد خبروں پر ہتک عزت کا کیس ہوسکے گا، بل کا اطلاق یو ٹیوب، ٹک ٹاک، ایکس، فیس بک اور انسٹاگرام کے ذریعے پھیلائی جانیوالی جعلی خبروں پر بھی ہوگا۔

کسی شخص کی ذاتی زندگی اور عوامی مقام کو نقصان پہنچانے کیلئے پھیلائی جانے والی خبروں پر قانون کے تحت کارروائی ہوگی، ہتک عزت کے کیسز کیلئے خصوصی ٹربیونلز قائم ہوں گے جو 6 ماہ میں فیصلہ کرنے کے پابند ہوں گے، بل کے تحت 30 لاکھ روپے کا ہرجانہ ہوگا۔

خواتین اور خواجہ سراؤں کیلئے حکومتی لیگل ٹیم کی سہولت میسر ہوگی، دوسری جانب حکومت نے صحافتی تنظیموں کیجانب سے بل موخر کرنے کی تجویز مسترد کردی۔

صحافتی تنظیموں نے آج وزیر اطلاعات پنجاب سے ملاقات میں بل کچھ روز موخر کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔ صحافتی تنظیمیں بل سے متعلق اپنی تجاویز دینا چاہتی ہیں، اپوزیشن نے بھی ہتک عزت بل کو مسترد کردیا ہے، اور اس معاملے میں 10 سے زائد ترامیم پنجاب اسمبلی میں جمع کرا دیں۔

latest urdu news