امریکا ،پاکستان کو اہم ترین پارٹنر سمجھتا ہے

وفاقی وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم طالبان کی سینئرلیڈرشپ سے رابطہ کررہے ہیں، اشرف غنی سے بھی رابطے میں ہے، تمام فیصلہ کرنے والی قوتوں کویکجا کرنے کی کوشش کررہے ہیں، نہیں چاہتے افغانستان سول وارکا شکارہوجائے۔
ان کا کہنا تھا کہ افغانستان کے امن اوراستحکام سے سینٹرل ایشیا تک تجارت ہوسکے گی، کل صبح تاجکستان کا دورہ کرونگا، تاجکستان کے بھی خدشات ہیں، افغانستان کی صورتحال خراب ہوئی تو تاجکستان بھی متاثرہوگا۔
شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ خطے کے دیگرممالک سے بھی مشاورت اور انہیں اعتماد میں لیں گے۔ کل امریکی وزیرخارجہ انتھونی بلنکن سے بڑے اچھے ماحول میں بات ہوئی، امریکی وزیرخارجہ نے کہا پاکستان کو اہم ترین پارٹنر سمجھتے ہیں۔
وفاقی وزیرخارجہ نے کہا کہ امریکی وزیر خارجہ کو کہا امریکا سے تجارتی تعلقات بھی بڑھانا چاہتے ہیں، امریکا اورپاکستان کا افغانستان میں ابجیکٹو ایک ہے، عمران خان پہلے دن سے کہہ رہے تھے بات چیت سے مسئلہ حل ہوگا، آج امریکا خود کہہ رہا ہے افغان مسئلے کا حل بات چیت سے حل ہوگا۔

جواب دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here

− 1 = 1